لندن،16سالہ لڑکی نے باپ کے دوست کے ہاتھوں جنسی زیادتی کا نشانہ بننے کے بعد خودکشی کر لی

0

لندن(اے ون نیوز) برطانوی ٹی وی شو ’بی جی ڈی‘ کے لیے انٹرویو دینے والی 16سالہ لڑکی نے باپ کے دوست کے ہاتھوں جنسی زیادتی کا نشانہ بننے کے بعد خودکشی کر لی۔

ڈیلی سٹار کے مطابق اس لڑکی کا نام بیٹریکس ہارٹ تھا جو ٹریگزی کے نام سے جانی جاتی تھی۔ ستمبر 2018ءمیں اس کی لاش ان کے کارنویل میں واقع گھر سے برآمد ہوئی، جس کی تحقیقات میں اب انکشاف ہوا ہے کہ اس نے اپنے باپ کے دوست کے ہاتھوں جنسی زیادتی کا نشانہ بننے کے بعد خودکشی کی تھی۔

عدالت میں بتایا گیا ہے کہ ٹریگزی کی ذہنی حالت اس وقت بگڑنی شروع ہوئی جب اس نے کلنگٹن کمیونٹی کالج میں داخلہ لیا۔ اسے کالج میں دیگر طلبہ کی طرف سے تضحیک کا نشانہ بنایا جاتا تھا۔ اس کے علاوہ اسے آن لائن بُلنگ کا بھی سامنا تھا، جن کی وجہ سے وہ ڈپریشن کا شکار تھی۔ اس پر ٹریگزی کے باپ کے ایک دوست کی شرمناک حرکت نے جلتی پر تیل کا کام کیا اور ٹریگزی کی ڈپریشن اس حد تک جا پہنچی کہ اس نے خودکو نقصان پہنچانے کا فیصلہ کر لیا۔

عدالت میں بتایا گیا ہے کہ ٹریگزی نے اپنے ساتھ ہونے والی جنسی زیادتی کی پولیس کو رپورٹ کی تھی لیکن جب اس شخص نے پولیس سے کہا کہ دونوں نے باہمی رضامندی سے جنسی تعلق قائم کیا تھا تو پولیس نے اس آدمی کو سچا قرار دے کر ٹریگزی کے الزام کو جھوٹ کہہ کر الٹا اس کی سرزنش کر دی، جس پر وہ شدید مایوسی کا شکار ہو گئی اور باپ کا گھر چھوڑ کر ماں کے پاس چلی گئی اور اپنی ڈپریشن کی دوا بھی کھانی بند کر دی تھی۔ اس کیس پر مزید تفتیش کی جا رہی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here