مسلم دشمنی میں مودی حکومت اندھی،مسلمان طالبات کو برقع پہننے پرکالج سے باہرنکال دیا گیا

0
35

نئی دہلی(اے ون نیوز) مسلم دشمنی میں مودی سرکار اندھی ہو گئی، اترپردیش کے کالج میں مسلمان طالبات کو برقعہ پہننے پر کالج سے باہر نکال دیا گیا، کالج پرنسپل چھڑی سے طالبات کو باہر نکلنے کا کہتے رہے۔ہندوستان میں صرف ہندو مذہب کا راج، گائے ذبح کرنے پر پابندی کےبعد اب تعلیمی اداروں میں برقعہ بھی بین کر دیا گیا۔ ریاست اترپردیش کے شہر فیروز آباد میں مسلمان طالبات کوبرقع پہن کرکالج میں داخل ہونے سے روک دیا گیا۔ کالج پرنسپل چھڑی کے ساتھ طالبات کو باہر نکالتے رہے۔

طالبات کا کہنا ہے کہ انہیں صرف برقع پہننے پر کالج سے نکالا جا رہا ہے۔ پرنسپل کا کہنا ہے کہ کالج میں صرف یونیفارم اورآئی ڈی کارڈ پہن کر داخل ہوا جا سکتا ہے، پولیس بھی کالج انتظامیہ کےساتھ ہے۔ادھر تامل ناڈو میں چھٹی کلاس کے امتحان میں متنازع سوال “کیا دلت اچھوت ہوتے ہیں” سوشل میڈیا پر وائرل ہو گیا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here