نوازشریف کیخلاف بغاوت کے مقدمے پر شہبازشریف کا موقف بھی آگیا

0

لاہور (اے ون نیوز) شہباز شریف اور حمزہ شہباز کی جانب سے نواز شریف کیخلاف بغاوت کے مقدمے کی شدید مذمت کی۔ شہبازشریف کہتے ہیں نواز شریف پر مقدمہ کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔حمزہ شہباز نے کہا جس شخص نے ملک کو ایٹمی طاقت بنایا اس پر مقدمہ کرنا افسوس ناک ہے۔ اللہ پاک ہمیں اس امتحان میں سرخ رو کریگا۔

عطا تارڑ بولے یہ حکومت کے اوچھے ہتھکنڈے ہیں، نواز شریف کے خلاف بغاوت کا مقدمہ نہیں بنتا، وہ 3 مرتبہ وزیر اعظم بنے۔انہوں نے کہا کہ نواز شریف عوامی لیڈر ہیں، محب وطن نہ ہونے والا 5 ایٹمی دھماکے نہیں کر سکتا۔ جھوٹے مقدمہ بازی سے باز نہ آنے والوں کے فارن فنڈنگ کیس سب کے سامنے رکھیں گے۔

یاد رہے کہ تھانہ شاہدرہ میں سابق وزیراعظم نوازشریف ، ان کی صاحبزادی مریم نواز اور دیگر پارٹی قائدین کے خلاف بغاوت کے لیے اکسانے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیاگیا، یہ مقدمہ بدررشید نامی شہری کی مدعیت میں یکم اکتوبر کو درج کیا گیا۔

مقامی میڈیا کے مطابق پاکستان پینل کوڈ کی دفعات مجرمانہ سازش کے تحت درج کیے گئے مقدمے کی ایف آئی آر کے متن میں کہا گیا کہ نوازشریف نے مقتدر حلقوں کیخلاف گفتگو کی ، عوام کو بغاوت پر اکسایا، ، نوازشریف نے اپنی تقاریر میں دشمن ملک بھارت کی ڈیکلیئر پالیسی کی تائید کی۔متن میں مزید کہا گیا کہ نوازشریف نیب قوانین کےتحت سزایافتہ مجرم ہیں،اشتعال انگیزتقاریرکےذریعےاداروں کیخلاف بغاوت پراکسایاگیا جبکہ ملکی قوانین سزایافتہ مجرم کوایسی تقاریراوراقدامات کی اجازت نہیں دیتے۔

مقدمے میں نوازشریف اور مریم نواز کے ساتھ سنٹرل ورکنگ کمیٹی کے اجلاس میں شریک ن لیگی رہنما شاہدخاقان عباسی، بیگم نجمہ وحید،بیگم ذکیہ شاہنواز،طارق رزاق چودھری ، شیزافاطمہ،جاویدعباسی،مہتاب عباسی،جاویدلطیف،مریم اورنگزیب ،ایازصادق ، ظفرالحق،خرم دستگیر،اقبال ظفرجھگڑا،صلاح الدین ترمذی،احسن اقبال،شیخ آفتاب،پرویزرشید،خواجہ آصف اور راناثنااللہ کو بھی نامزد کیا گیا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here