نیا سال کا تحفہ،تبدیلی سرکارنےعوام پرپٹرول بم گرادیا

0

اسلام آباد(اے ون نیوز) وفاقی حکومت نے عوام پر نیا سال کا بم گراتے ہوئے پٹرول کی قیمت میں 2 روپے 31 پیسے کا اضافہ کر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی حکومت سے عوام کو نیا سال کا تحفہ دیدیا گیا ہے، حکومت نے فی لٹر پٹرول کی قیمت میں 2 روپے 31 پیسے کا اضافہ کر دیا گیا ہے۔ پٹرول کی نئی قیمت 106 روپے ہو گئی ہے۔

دوسری طرف ڈیزل کی قیمت میں 8 روپے 37 پیسے تک اضافہ کی سمری مسترد کر دی گئی ہے، وزیراعظم عمران خان نے صرف 1 روپے 80 پیسے تک اضافہ کرنے کی منظوری دی ہے جبکہ ڈیزل کی نئی قیمت 110 روپے 24 پیسے ہوگی

گزشتہ روز اوگرا نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی سمری پیٹرولیم ڈویژن کو بھجوائی تھی۔ اوگرا کی سمری میں پیٹرول 2 روپے 96 پیسے فی لیٹر مہنگا کرنے کی تجویز دی گئی تھی۔

ذرائع کے مطابق حکومت ہائی سپیڈ ڈیزل 3 روپے 12 پیسے فی لیٹر مہنگا کرنے پر غور کیا جا رہا تھا جبکہ مٹی کا تیل اور لائٹ ڈیزل کی قیمت بھی اضافہ کرنے کی تجویز زیر غور تھی۔یاد رہے کہ ابھی پندرہ روز قبل 15 دسمبر کو پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں فی لٹر 5 روپے کا اضافہ کیا گیا تھا۔

وزارت خزانہ کی طرف سے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق پیٹرول کی فی لٹر قیمت اس وقت 103 روپے 69 پیسے ہے۔ دوسری طرف ہائی سپیڈ ڈیزل 3 روپے اضافے کے بعد 108 روپے 44 پیسے پر فروخت ہو رہا ہے جبکہ مٹی کا تیل 5 روپے اضافے کے بعد 70 روپے 29 پیسہ کا کر دیا گیا تھا۔ لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت بھی 5 روپے اضافے کے بعد 67 روپے 86 پیسہ فی لیٹر مقرر ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here