ایڈوائزری کونسل برطانیہ بھرمیں کام کرے گی،کمیونٹی مسائل ترجیحی بنیادوں پرحل کریں گے،چوہدری وسیم اختر

0

مانچسٹر(اے ون نیوز) اوورسیز پاکستانی کمیشن پنجاب کے وائس چیئرپرسن چوہدری وسیم اختر سرکاری دورہ پر برطانیہ پہنچ چکے ہیں۔ مانچسٹر کے مقامی ریسٹورنٹ ہال میں ایڈوائزری کونسل کے اراکین کی نامزدگی کے موقع پر ایک پروقار تقریب کا انعقاد کیا گیا ۔ وزیراعظم عمران خان کے اوورسیز تجارت اور سرمایہ کاری کے ترجمان صاحبزادہ عامر جہانگیر، تحریک انصاف برطانیہ کے مرکزی صدر ملک شرجیل خان، دیگر ریجنز کے عہدیداران کنوینئر اوورسیز انٹر نیشنل آرگنائزنگ کمیٹی سید مخدوم، سید طارق محمود الحسن کے کوآرڈینیٹر ملک عمران خلیل،آصف رشید بٹ ، سابق رکن برطانوی پارلیمنٹ افضل خان اور دیگر افراد نے شرکت کی۔

یاد رہے چوہدری وسیم اختر کمیشن کے بارے میں آگاہی دینے کے لیے خصوصی طور پر ائے ہیں۔ اس موقع پر چوہدری وسیم اختر کا کہنا تھا کہ برطانیہ میں دورے کا مقصد یوکے کی ایڈوائزری کونسل کے اراکین کے نوٹیفکیشن جاری کرنا تھا ان کا مذید کہنا تھا کہ ایڈوائزری کونسل برطانیہ بھر

میں کام کرے گی اور اوورسیز پاکستانی کمیونٹی کے مسائل ترجیح بنیادوں پر حل کیے جائیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ جب سے انہوں نے اوورسیز پنجاب ایڈوائزری کونسل کا عہدہ سنبھالا ہے اس سے پہلے اوورسیز کے کیسز کے حل کا تناسب 37فیصد تھا اسکے بعد انہوں نے اسے 57 فیصد تک پہنچایا۔ ان کا کہنا تھا کہ ہمارے پاس تین ہزار کیسز آئے اور ہم تین ہزار سے زائد کیسز کو حل کیا جو کہ کامیابی کی شرح 127فیصد بنتی ہے ایک ریکارڈ ہے۔

مخدوم طارق الحسن کا کہنا تھا کہ برطانیہ میں پہلی دفعہ اوورسیز ایڈوائزری کونسل کا قیام عمل میں لایا جا رہا ہے جسکا کام یوکے بھر میں بسنے والی پاکستانی کمیونٹی کے پاس جا کر انکے مسائل کی نشاندہی کر کے حل کروانا ہے ۔ عمران خلیل کا کہنا تھا کہ ایڈوائزری کونسل اوورسیز کے مسائل پر بات چیت کرے گی اور لوگوں کے مسائل حل ہوں گے۔ آصف رشید بٹ کا کہنا تھا کہ چوہدری وسیم کی تقرری خوش آئند ہے ان کا مذید کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان اوورسیز پاکستانیوں کے مسائل کو ترجیح بنیادوں پر حل کرنے کے خواہاں ہیں اسی لیے اوورسیز کمیشن کو مذید فعال کیا گیا ہے۔ اس موقع پر محمد آصف و دیگر نے بھی ایڈوائزری کونسل کے قیام کو کمیونٹی کے دیرینہ مسائل کو حل کرنے کو اہم قرار دیا۔

سابق رکن برطانوی پارلیمنٹ افضل خان کا کہنا تھا کہ بیرون ممالک بسنے والے پاکستانی قیمتی سرمایہ ہیں۔ پاکستان میں جو بھی حکومت ہو وہ پاکستانیوں کی حقیقی خدمت کرے۔ بیرون ممالک بسنے والوں کے مسائل حل کرنا پاکستان حکومت کی ذمہ داری ہے۔ نارتھ ویسٹ ریجن کے صدر عمران چوہدری کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان سیر و سیاحت کو بھی اہمیت دے رہے ہیں اس میں کام کرنے کی ضرورت ہے۔ صاحبزادہ عامر جہانگیر کا کہنا تھا کہ اوورسیز کمیشن کی ایڈوائزری کونسل کے اراکین پر بھاری ذمہ داری عائد ہو گئ ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ جب تک عمران خان موجود ہے پاکستان مشکلات سے جلد نکلے گا ۔ ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان ایک متحرک رہنما ہے اسی لیے عالمی سطح وہ قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ بیرون ممالک بسنے والوں کو از خود دیکھنا ہے کہ وہ پاکستان کی کیا مدد کر سکتے ہیں اسکے لیے کسی کے احکامات کا انتظار مت کریں پاکستان کی خوشحالی کے لیے آگے بڑھیں۔اس موقع پر وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی نامور کاروباری شخصیت انیل مسرت کا کہنا تھا کہ اوورسیز پاکستانی کمیشن کو ہم آفس فراہم کریں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ کہ عمران خان بیرون ممالک بسنے والوں کے مسائل ترجیح بنیادوں پر حل چاہتے ہیں۔ تحریک انصاف برطانیہ کے مرکزی صدر شرجیل ملک نےکہا کہ اوورسیز پاکستانی کمیشن کو ایڈوائزری کونسل کے اراکین کے انتخاب پر دلی مبارک باد پیش کرتا ہوں۔ ان کا مذید کہنا تھا کہ ہم پاکستان کی ترقی کے لیے کام کرنا چاہتے ہیں ۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کا مثبت تشخص اجاگر کرنے کے لیے ہمیں اپنا کردار ادا کرنا چاہیے تاکہ عالمی سطح پر پاکستان کی عزت اور ترقی ہو ۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here