بھارت میں ٹک ٹاک کی بندش، 22 سالہ سٹار نے خود کشی کرلی

0

میرٹھ (اے ون نیوز) بھارت میں ٹک ٹاک کی بندش سے مایوس ہو کر 22 سالہ ٹک ٹاک سٹار نے خود کشی کرلی۔22 سالہ سندھیا چوہان دلی یونیورسٹی کی طالبہ اور ٹک ٹاک پر بہت زیادہ متحرک تھیں، بھارتی میڈیا میں ایسی رپورٹس سامنے آئی ہیں کہ انہوں نے ٹک ٹاک پر پابندی کے بعد خود کشی کی ہے تاہم پولیس نے اس معاملے پر ابھی کوئی بات نہیں کی۔

یہ بھی پڑھیں ارشد پپو کو مار کر لاش کیسے ٹھکانے لگائی؟عزیر بلوچ کا دل دہلا دینے والا انکشاف

میڈیا رپورٹس کے مطابق سندھیا چوہان پولیس انسپکٹر کی بیٹی ہیں، ان کا خاندان گزشتہ 6 ماہ سے میرٹھ کے پلوپورم گرین پارک میں رہائش پذیر ہے۔ جس وقت سندھیا نے خود کشی کی اس وقت اس کی والدہ گھر پر ہی موجود تھیں۔ سندھیا نے شام 5 بجے اپنے کمرے کو اندر سے بند کیا اور پھندے سے جھول گئیں، ان کے پھوپھی زاد بھائی نے واقعے کے بارے میں پولیس کو اطلاع کی ، پولیس نے موقع پر پہنچ کر دروازہ توڑ کر سندھیا کی لاش کو نکالا اور اسے ہسپتال پہنچایا جہاں ڈاکٹرز نے اس کی موت کی تصدیق کردی۔

یہ بھی پڑھیں جنوبی افریقہ میں مقیم پاکستانیوں کا مسائل حل کرنے کےلئے پاکستانی ایمبیسی میں کمیونٹی ویلفیئر اتاشی تعینات کرنے کا مطالبہ

پولیس نے سندھیا چوہان کا موبائل فون اور دیگر اشیا قبضے میں لے کر تحقیقات شروع کردی ہیں۔ یہ بھی کہا جارہا ہے کہ وہ گزشتہ 2 ماہ سے ہی ڈپریشن میں تھیں ، پولیس ان کی موت کے واقعے کی تمام پہلوؤں سے تحقیقات کر رہی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here