بھارت میں کرفیو کے دوران ’کرونا‘ بچی کی پیدائش

0

نئی دہلی(اے ون نیوز) بھارت کے شمال مشرقی علاقے سے تعلق رکھنے والے والدین نے کرفیو کے دوران پیدا ہونے والی بچی کا نام ’کرونا‘ رکھ دیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق ریاست اترپردیش کے علاقے گورکھ پور میں اتوار کے روز بچی کی پیدائش اُس وقت ہوئی جب ملک بھر میں حکومت کی جانب سے جنتا کرفیو نافذ کیا گیا تھا۔

یاد رہے کہ بھارتی حکومت نے کرونا وائرس کی روک تھام کے لیے 22 مارچ کو کرفیو نافذ کیا تھا اور عوام سے اپیل کی تھی کہ وہ گھروں تک ہی محدود رہیں۔

گورکھ پور سے تعلق رکھنے والے شہری نتیش تریپاتھی (ماموں) کا کہنا تھا کہ بچی کی پیدائش اتوار کے روز اُس وقت ہوئی جب شہر میں کرفیو لگا ہوا تھا، ہمیں اپنی بہن کو اسپتال لانے میں بہت زیادہ مشکل کا سامنا کرنا پڑا۔

اُن کا کہنا تھا کہ ہم نے بچی کا نام کرونا رکھا ہے اور اب اسی نام سے ہی سرکاری دستاویز میں اُس کا اندراج کروائیں گے۔ ترپاتھی کا کہنا تھا کہ میں نے بچی کی والدہ (راگنی ترپاتھی) سے بھی کرونا نام رکھنے کی اجازت لی جس پر انہوں نے رضا مندی ظاہر کردی۔

ترپاتھی کا کہنا تھا کہ ’اس میں کوئی شک نہیں کہ کرونا وائرس بہت ہی خطرناک وبا ہے جس کی وجہ سے اب تک دنیا میں ہزاروں لوگ مرچکے ہیں‘۔ انہوں نے نام رکھنے کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ ’ہماری بھانجھی اتحاد کی علامت ہے، جس روز یہ پیدا ہوئی اُس دن پورا بھارت متحد ہوکر کرونا جیسی وبا لڑ رہا تھا‘۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here