پاکستان سپر لیگ غیر ملکی کھلاڑی میں کرونا وائرس کی وجہ سے ملتوی ہوئی؟اے ون ٹی وی اصل کہانی سامنے لے آیا

0

لاہور(اے ون نیوز) پی سی بی نے پاکستان سپرلیگ کے لاہور میں ہونے والے سیمی فائنل اور فائنل میچز کو منسوخ کرنے کا اعلان کر دیا ہے تاہم اے ون ٹی وی کے ذرائع کے مطابق پی ایس ایل کی ایک فرنچائز کی جانب سے غیر ملکی کھلاڑیوں کے واپس جانے کے باعث کھیلنے سے اعتراض کیا گیاتھا ۔

اے ون ٹی وی کے ذرائع کےمطابق جس وقت لاہور میں سیمی فائنل اورفائنل میچ کروانے کی تجویز دی گئی تو پی ایس ایل کی تین فرنچائز ز نے اعتراض کیا تھا کہ کراچی میں ٹیمیں موجود ہیں اور کراچی میں ہی باقی میچ کروائے جائیں جس پر پاکستان کرکٹ بورڈ نے ٹیموں کے درمیان ووٹنگ کروائی تھی ۔

اے ون ٹی وی کے ذرائع کے مطابق ووٹنگ کے دوران تین ٹیموں نے لاہور میں کروانے اور تین نے کراچی میں کروانے کیلئے ووٹ دیا اور یوں ووٹ برابر ہو گئے جسکے بعد پی سی بی نے اپنا اختیار استعمال کرتے ہوئے میچز لاہور میں کروانے کا فیصلہ کیا جن تین ٹیموں نے لاہور میں میچز کروانے کیخلاف ووٹ دیا تھا ان میں سے ایک ٹیم کوئٹہ گلیڈی ایٹرز تھی جو کہ ٹورنامنٹ سے باہر ہو گئی جبکہ کراچی کنگز نے بھی کراچی میں ہی میچز کروانے کیلئے ووٹ دیا ۔

ذرائع نے دعویٰ کیا کہ ایک فرنچائز کے غیر ملکی کھلاڑی کی طبیعت ناساز تھی تو وہ اپنے وطن واپس چلے گئے اور وہاں جانے کے بعد اس کھلاڑی نے خود کو آئی سولیشن کر دیا ہے ۔اس کے بعد جو باقی کھلاڑی تھے وہ بھی خوف کا شکار تھے ، اس کھلاڑی کے ساتھ جو دوسرے کرکٹرز تھے ان میں بھی گھبراہٹ پائی جارہی تھی ۔

اس ساری صورت حال کو دیکھ کرپاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے میچز منسوخ کرنے کا اعلان کر دیا گیااور ٹویٹر پر جاری پیغام میں کہا گیاہے کہ ملتوی کیے جانے والے میچز کا شیڈول جلد ہی دوبارہ جاری کیا جائے گا اور اس حوالے سے تفصیلات بعد میں فراہم کی جائیں گی ۔پی سی بی نے براڈ کاسٹنگ ٹیم کو بھی آگاہ کر دیاہے جس کے بعد انہوں نے قذافی سٹیڈیم میں لگائے گئے کیمرے اور دیگر سازو سامان اتارنا شروع کر دیا ہے اورواپسی کیلئے تیاری پکڑ لی ہے ۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here