تازہ ترینکھیل

فاسٹ باﺅلر شاہین آفریدی کب تک صحت یاب ہو سکتے ہیں؟پی سی بی نے اعلان کر دیا

لاہور(اے ون نیوز )پاکستان کرکٹ بورڈ نے کہا ہے کہ مایہ ناز فاسٹ باﺅلر شاہین آفریدی کے گھٹنے پر زخم کا کوئی نشان نہیں ہے۔

خیال رہے کہ پاکستان کے فاسٹ باو¿لر شاہین شاہ آفریدی کو میلبورن میں آئی سی سی مینز ٹی 20 ورلڈ کپ 2022 کے فائنل کے دوران ہیری بروک کا کیچ لیتے ہوئے گھٹنے کی انجری ہوگئی تھی جس کے بعد ان کو گراو¿نڈ سے باہر جانا پڑا تھا۔

ٹیم کی پاکستان روانگی سے قبل پیر کی صبح کیے گئے سکین نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ انجری کے کوئی آثار نہیں ہیں اور گھٹنے میں تکلیف کیچ لیتے ہوئے گھٹنے کے مڑنے کی وجہ سے ہوسکتی ہے۔

پی سی بی کے چیف میڈیکل آفیسر ڈاکٹر نجیب اللہ سومرو اور آسٹریلوی گھٹنے کے ماہر ڈاکٹر پیٹر ڈی الیسنڈرو کے درمیان اسکینز پر بات ہوئی اور یہ جان کر یقین دہانی کرائی گئی کہ کوئی چوٹ نہیں آئی، بائیں ہاتھ کے تیز گیند باز بہتر محسوس کر رہے ہیں اور ان کے حوصلہ بلند ہیں۔

شاہین پاکستان واپسی کے چند دنوں بعد نیشنل ہائی پرفارمنس سینٹر میں بحالی اور کنڈیشنگ پروگرام سے گزریں گے جو ان کے گھٹنے کو مضبوط کرنے کے لیے بنایا گیا ہے۔

پی سی بی کا کہنا ہے کہ شاہین آفریدی کا ری ہیب وطن واپسی کے چند روز بعد نیشنل ہائی پرفارمنس سنٹر میں شروع ہو گا، شاہین آفریدی کی انٹرنیشنل کرکٹ میں واپسی دو ہفتے کے کامیاب ری ہیب سے مشروط ہو گی، ری ہیب مکمل ہونے پر میڈیکل اسٹاف شاہین آفریدی کا دوبارہ معائنہ کرے گا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button