یونان کے سابق کمیونٹی صدرنے سید محمد جمیل کا چیلنج قبول کرلیا

0

ایتھنز (نمائندہ خصوصی) یونان میں کمیونٹی الیکشن بہتر ہے یا فیڈریشن کا قیام ؟ اس سوال پر گزشتہ ہفتہ معروف سماجی راہنما سید محمد جمیل نے اپنے پروگرام اصل حقائق میں کمیونٹی صدور اور رہنماوں کو مناظرہ کا کھلا چیلنج دیتے ہوئے کہا تھا کہ کمیونٹی میں الیکشن کے ذریعے صدر کے انتخاب کا نظام ناکام ہوچکا ۔

یہ بھی پڑھیں پی آئی اے کی پروازوں پر پابندی کیوں؟پاکستان کا کویت کو کرارا جواب

جس کے جواب میں یونان کے معروف ٹاک شو” ایتھنز ٹاک ود احسان ” میں گفتگو کرتے ہوئے سابق صدر پاکستان کمیونٹی گریس شاہد نواز وڑائچ نے اس چیلنج کو قبول کر لیا ہے ۔شاہد نواز نے اسی ٹی وی پروگرام میں سید محمد جمیل کو آمنے سامنے آکر دلائل دینے اور سننے کی پیشکش کرتے ہوئے دعوی کیا ہے کہ کمیونٹی الیکشن کے ذریعے نمائندہ صدر کا انتخاب ہی بہترین حل ہے ۔

یہ بھی پڑھیں برطانوی فورسزکیلئےکام کرنیوالے 250 سے زائد افغان ترجمانوں کا ڈیٹا لیک

انہوں نے کہا کہ ووٹ کے ذریعے منتخب ہونے والا صدر عوام کا براہ راست نمائندہ ہوتا ہے جبکہ فیڈریشن کے ذریعے چند لوگوں کے ووٹ سے منتخب ہونے والا صدر کسی طور بھی عوام کا نمائندہ کہلانے کا حق دار نہیں ہو سکتا ۔اب دیکھنا یہ ہے کہ اب سید محمد جمیل مناظرہ کی قبولیت پر کیا رد عمل دیتے ہیں یا کب اس مناظرہ کو یقینی بناتے ہیں ؟

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here